روزہ توڑنے والے غلام پہ نبی کریم صلی اللہ علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم کا کرم - Daily Qudrat
Can't connect right now! retry

روزہ توڑنے والے غلام پہ نبی کریم صلی اللہ علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم کا کرم


اسلام آباد (قدرت روزنامہ) ایک غلام نبی کریم صلی اللہ تعالیٰ علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم کی بارگاہ میں حاضر ہوا عرض کی حضور صلی اللہ علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم روزہ رکھا تھا لیکن ٹوٹ گیا ہے آپؐ کی بارگاہِ اقدس میں حاضر ہوا ہوں آپؐ اس کا کوئی حل فرمائیں آپؐ نے فرمایا اس کا حل یہی ہے کہ دو ماہ لگاتار روزے رکھو یا ساٹھ مسکینوں کو کھانا کھلاؤ یا ایک غلام آزاد کرواؤ غلام عرض کرنے لگ حضور صلی اللہ علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم اگر مجھ میں دوماہ روزے رکھنے کی طاقت ہوتی تو ایک ہی نہ توڑتا اور کو کھانا یا غلام آزاد کروانا میرے بس میں نہیں حضور صلی اللہ علیہ وآلہ واصحابہ وبارک

وسلم میں غریب آدمی ہوں یہ سب کچھ ناممکن ہے نبی کریم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے فرمایا اچھا بیٹھ جاؤ تھوڑی دیر کے بعد ایک بندہ کجھوروں کا ٹوکرا لیکر بارگاہِ اقدس میں حاضر ہوا اور کھجوریں آپؐ کو پیش کی آپ نےفرمایا روزہ توڑنے والا کہاں ہے وہ غلام حاضر ہوا نبی کریم صلی اللہ علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم نے فرمایا جاؤ یہ کھجوروں کا ٹوکرا اٹھاؤ اور سارے محلے کے غریبوں میں تقسیم کر دو روزے کا کفارہ ادا ہوجائےگا وہ غلام عرض کرنے لگا حضورؐ میرے ماں باپ آپؐ پہ قربان مجھ سے زیادہ اس محلے میں کوئی غریب نہی ہے میں ہی سب سے غریب ہوں حضور صلی اللہ علیہ وآلہ واصحابہ وبارک

وسلم کی رحمت جوش پہ تھی آپؐ نے فرمایا اچھا جاؤ اپنے گھر میں ہی تقسیم کردو اپنے بیوی بچوں کو کھلاؤ اور خود بھی کھاؤ روزے کا کفارہ ادا ہوجائے گا غلام بہت خوش ہوا اور غلام نے یقناً یہ کہا ہوگا کہیوں تو سارے نبی محترم ہے مگر سرورِ انبیاء تیری کیا بات ہےوہ حضور صلی اللہ علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم کے قدموں پہ گرا اور عرض کرنے لگا جیسے میری سرکارؐ ہیں ایسا نہی کوئی

..

ضرور پڑھیں: دنیا کے بڑے بڑے شہر پانی میں ڈوبنے والے ہیں؟ قرآن کریم میں 1400 سال قبل کی جانیوالی پیش گوئی

ضرور پڑھیں: حضوراکرم نے فرمایا قریب قیامت میں لوگ اپنی بیویوں سے زنا کرینگے اور آج واقعی میں ایسا ہو رہا ہے لیکن کیسے ؟ جانئے

مزید خبریں :